Sufinama

بخوبی ہمچو مہ تابندہ باشی

امیر خسرو

بخوبی ہمچو مہ تابندہ باشی

امیر خسرو

MORE BY امیر خسرو

    INTERESTING FACT

    کچھ اشعار کا اردو منظوم ترجمہ عزیز وارثی دہلوی نے کیا ہے

    بخوبی ہمچو مہ تابندہ باشی

    بملک دلبری پایندہ باشی

    مثال ماہ تابندہ رہو تم

    دیار ِدل میں پائندہ رہو تم

    من درویش را کشتی بہ غمزہ

    کرم کردی الٰہی زندہ باشی

    مجھے غمزوں سے تم نے مار ڈالا

    دعا میری یہ ہے زندہ رہو تم

    جفا کم کن کہ فردا روز محشر

    بروئے عاشقاں شرمندہ باشی

    نہ ہو ایسا کہ قتلِ عاشقاں سے

    بروز حشر شرمندہ رہو تم

    ز قید دو جہاں آزاد باشم

    اگر تو ہم نشین بندہ باشی

    رہوں آزاد میں دونوں جہاں سے

    اگر پہلو میں رخشندہ رہو تم

    جہاں سوزی اگر در غمزہ آئی

    شکر ریزی اگر در خندہ باشی

    برندی و بشوخی ہمچو خسرو

    ہزاراں خان و ماں برکندہ باشی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY